کوٹلی پولیس کابین الاقوامی سمگلرگروہ کیخلاف کریک ڈاؤن،قدآورشخصیات منشیات فروش نکلیں

کوٹلی پولیس کابین الاقوامی سمگلرگروہ کیخلاف کریک ڈاؤن،قدآورشخصیات منشیات فروش نکلیں

SHARE

کوٹلی(نیوز)ایس ایس پی راجہ عرفان سلیم کا کوٹلی پولیس کا بین الاقوامی سمگلرگروہ کے خلاف کریک ڈاؤن ،04 ارکان گرفتار 08 کلو 600 گرام ہیروئن برآمدگی،ہیروئن لیدر جیکٹس میں خفیہ طور پر بیرون ملک سمگل کی جانے والی ہیرؤن کے حوالے سے میڈیانمائندگان کوبریفنگ کے دوران بتایاکہ ضلع کوٹلی میں ایک منظم گروہ عرصہ دراز سے مختلف طریقوں سے برطانیہ ہیروئن سمگلنگ کرنے میں مصروف تھا اور ہمیشہ پولیس کی گرفت سے بچا ہوا تھا ۔ چند روز قبل پولیس کو خفیہ طور پر اطلاع ملی کہ یہ گروہ منظم طریقہ سے ناڑ کے سادہ لوح اور غریب لوگوں کو معمولی رقم کا لالچ دے کر لیدر جیکٹس کی آڑ میں ہیروئن برطانیہ سمگل کر رہا ہے۔ اس اطلاع پر گزشتہ 15 روز کی پولیس کی دن رات محنت اور کوشش کے بعد اس منظم گروہ کا سراغ لگایا اور 04 کس ملزمان (۱) عطا ء الرحمان ولد نصیر شاہ قوم سید ساکن پٹیڑی ناڑ (۲) عبدالغفار ولد محمد صادق قوم جوگی ساکن تکیہ ناڑ (۳) سلیم قادری ولد محمد اسلم بٹ قوم کشمیر ساکن مندیاڑی کوٹلی(۴) غلام فرید ولد باغ علی قوم جاٹ ساکن پٹیڑی ناڑ کو گرفتار کر کے ان کے قبضہ سے 10 لیدر جیکٹس اور 08 کلو 600 گرام ہیروئن برآمد کر لی ہے۔ ملزمان نے دوران تفتیش اہم انکشافات کرتے ہوئے بتایا کہ ان کے گروہ میں(۱) حافظ منصور سلطانی ولد فاروق احمد قوم راجپوت ساکن کٹھاڑ تحصیل سہنسہ(۲)حبیب شاہ ولد گل حسین شاہ قوم سید ساکن پنگ پیراں کوٹلی جو اس وقت دبئی روپوش ہیں کے علاوہ راجہ خالد ولد راجہ منور قوم راجپوت ساکن ڈیرہ نواب سہنسہ کے علاوہ اور لوگ بھی ملوث ہیں جن کے نام خفیہ رکھے گئے ہیں۔ وہ اعلیٰ کوالٹی کی لیدر جیکٹس میں خفیہ طور پر ہیروئن چھپا کرKPK سے میرپور منگواتے تھے اور میرپور سے لیدر جیکٹس وصول کر کے کوٹلی لاتے تھے۔ ناڑ کے علاقہ کے چند غریب اورسادہ لوح لوگوں کو معمولی رقم کالالچ دے کر آمادہ کرتے کہ یہ اعلیٰ کوالٹی کی لیدر جیکٹس ہیں جن کی برطانیہ میں فی جیکٹ 500 پاونڈ قیمت ہے اگر وہ اپنے کسی رشتہ دار یا جاننے والے کے ہاتھ ایک جیکٹ برطانیہ پہنچا دیں تو فی جیکٹ 5 سے 10 ہزار روپے ملیں گے۔ اسطرح وہ ان سادہ لوح لوگوں کے ذریعہ 20 سے زائد لیدر جیکٹ برطانیہ بھجوا چکے ہیں۔ لیدر جیکٹس لے جانے والے لوگوں کو علم نہ ہوتا تھا کہ جیکٹس کے اندر ہیروئن ہے ۔ جیکٹ برطانیہ پہنچنے پر یہ گروہ جیکٹ وصول کرتا اور رقم کی ادائیگی مختلف افراد کے نام بینک کوڈ کے ذریعے کرتا تھا۔ گرفتار ملزمان کے قبضہ سے ایک ٹیوٹا کرولا کار 2-OD مالیتی 12 لاکھ روپے جو منشیات کی رقم سے لی تھی بھی برآمد کر لی گئی ہے۔ ملزمان حافظ منصور سلطانی تحریک لبیک ضلع کوٹلی کا امیر تھا اور راجہ مشتاق نوابی ساکن ڈیرہ نواب سہنسہ کا دامادہے اور ملزم حبیب شاہ بھی تحریک لبیک کوٹلی کا رکن تھا جنہیں واقعہ میں ملوث ہونے پر تحریک لبیک کے اعلیٰ عہدیداران نے رکنیت سے فارغ کر دیا ہے ۔ ملزم حبیب شاہ کی بیوی شاہین کو بھی شامل تفتیش کیا گیا ہے ملزم راجہ خالد مذکور راجہ مشتاق نوابی ساکن ڈیرہ نواب سہنسہ کا حقیقی بھتیجا ہے۔ جو اس وقت برطانیہ میں مقیم ہے۔ بیرون ممالک رہائش پذیر ملزمان کی گرفتاری کے لئے انٹر پول اور برٹش پولیس سے رابطہ کیا گیا ہے ۔ برآمد شدہ ہیروئن کی برطانیہ میں قیمت 08 لاکھ 60 ہزار پاؤنڈ بتائی جاتی ہے جو پاکستانی کرنسی میں تقریباً 15 کروڑ روپے بنتی ہے۔ اس اہم مقدمہ کی تفتیش میں خواجہ عبدالقیوم DSP سٹی کوٹلی، سہیل یوسف انسپکٹر، طاہر ایوب SHO تھانہ کوٹلی، ذوہیب طاہر SHO ناڑ کی خصوصی محنت اور کوشش شامل ہے۔بقیہ ملزمان کی گرفتاری اور انہیں ہر صورت کیفرے کردار تک پہنچایا جائے گا۔ ایس ایس پی راجہ عرفان سلیم نے میڈیانمائندگان سے بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ منشیات فروش معاشرے کا ناسور ہیں ضلع کوٹلی میں جرائم کا خاتمہ مشن اور فرض بھی ہے پولیس جرائم پیشہ افراد کے خلاف بھرپور کاروائیاں کر رہی ہے پولیس کے نوجوان قانون کی پاسداری اور اخلاق کا اعلٰی نمونہ پیش کر کے پولیس کے وقار کو مسلسل بلند کر رہے ہیں پولیس کے فرائض احسن طریقے سے سر انجام دینے سے امن کو بھر پور فروغ مل رہا ہے محکمہ پولیس کے نو جوان پیشہ ورانہ مہارتوں اور فرض شناسی کے ساتھ اپنی جان پر کھیل کر سماج دشمن عناصر کو کیفر کردار تک پہنچانے میں اپنا کردار ادا کر رہے ہیں ان کی یہ کاوشیں قابل تحسین ہیں جرم اور مجرم کی حوصلہ شکنی کے لیے معاشرے کے ہر فرد کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیے منشیات فروشی کا خاتمہ ہمارے معاشرے کے بچوں کے محفوظ مستقبل کے لیے انتہائی اہم ہے اور ایک صحت مند معاشرے کے لیے بھی ضروری ہے پولیس کوعوام کے تعاون سے جرائم پر قابو پانہ آسان ہے ملزم جتنے بھی با اثر کیوں نہ ہوں قانون کی گرفت سے بچ نہیں سکتے ایس ایس پی راجہ عرفان سلیم نے کہاکہ منشیات فروشی کے قلع قمع کے لیے پولیس کی کامیاب کاروائیوں نے منشیات فروشوں کے لیے زمین تنگ کر دی ہے عوام الناس کے تعاون سے منشیات فروشوں کے خلاف بڑی کامیابیاں ملی ہیں اور پولیس نے منشیات جیسی لعنت کو جڑ سے ختم کرنے کا ارادہ کر رکھا ہے انہوں نے کہا کہ ضلع کوٹلی کی پولیس کی خدمات سماج دشمن عناصر کے خلاف قابل فخر ہیں ضلع کوٹلی کی پولیس محنتی ،فرض شناس اور پیشہ ورانہ مہارتوں سے مالا مال ہے یہاں کی فورس نے نامساعد حالات کے باوجود بھی اپنے فرائض منصبی دیانتداری اور محنت و لگن کے ساتھ سر انجام دے رہے ہیں ایس پی راجہ عرفان سلیم نے کہاکہ کوٹلی آزاد کشمیر کا سب سے بڑا ضلع ہونے کے ساتھ ساتھ انتہائی پر امن بھی ہے کوٹلی ضلع میں رواں سال کے دوران منشیات فروشوں کے خلاف بھرپور کارروائیاں کی گئی ہیں اور یہ کارروائیاں اس وقت تک جاری رہیں گی جب تک ان سماج دشمن عناصر کا قلع قمع نہیں کر دیا جاتا ۔ عوام کی جان و مال اور عزت کی حفاظت پولیس کی اولین ذمہ داری ہے جس پر کسی صورت سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔ پولیس کمی وسائل کے باوجود دن رات اپنے فرائض کی ادائیگی کے لئے کوشاں ہے۔ عوام اور میڈیا سے اپیل ہے کہ جرائم کے خاتمہ میں پولیس کی مدد کرتے رہیں۔دریں اثناء عوامی حلقوں نے راجہ عرفان سلیم کومنشیات فروش اورسماج دشمن عناصرکے خلاف کامیاب کاروائیوں پرزبردست الفاظ میں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے اپنے مکمل تعاون کایقین دلایاہے۔

[X]