جنسی سیکنڈل کیس، 6پولیس اہلکار معطل . second case, 6 policemen suspended

جنسی سیکنڈل کیس، 6پولیس اہلکار معطل

مظفراباد (کرائم رپورٹر) فضل آمین جنسی اسکینڈل کیس ویڈیوز وائرل کرنے پر تھانہ صدر کے چھ اہلکار معطل، تفصیلات کے مطابق سابق آپریشنل چیف حبیب بنک فضل آمین جنسی اسکینڈل کیس میں ویڈیوز وائرل کرنے پر اعلی سطحی کمیٹی قائم کی گئی جس پر فضل آمین کے موبائل سے نازیبا ویڈیوز وائر ہونے پر تھانہ صدر کے چھ اہلکاروں جن مین تفتیشی افسر ظفر افسر، تفتیشی منظور اعوان، محرر محمد علی نائب محرر افتخار احمد، جاوید، ظفر اقبال کو معطل کر دیا گیا،ذرائع کے مطابق تھانہ صدر کے چھوٹے ملازمین پر روایتی طور پر سارا نزلہ ڈالا گیا تاکہ سول سوسائٹی کی جانب سے ویڈیوز وائر ہونے کے معاملے کو دبایاجا سکے جبکہ اصل حقائق سے تاحال پردا نہ اٹھایا جا سکا ہے فضل آمین اسکینڈل کیس مین ویڈیوز وائرل ہونے پر ہیجرہ سے تعلق رکھنے والی خاتون مسماہ(س) نے خودکشی کر لی تھی ویڈیوز وائرل ہونے پر ڈی آئی جی ریجن سردار الیاس نے تھانہ صدر کے چھ اہلکاروں کو معطل کر دیا

Sex second case, 6 policemen suspended
Muzaffarabad (Crime Reporter) Fazal Ameen sex scandal case video suspended Viral police station six officials suspended Six Presidential Officers, including Investigation Officer Zafar Officer, Investigator Manzoor Awan, Mohar Mohammad Ali Deputy Mohair Iftikhar Ahmed, Javed, Zafar Iqbal were suspended when mobile phones were hacked to Najiba, sources said. Traditionally the whole stream was put down so that the videos from the civil society were wired Lie could be suppressed while the facts could not be uncovered yet Fazel Ameen scandal caseman video: Hijra-related woman Masmah (s) committed suicide when the videos went viral. Police station suspended six presidential officers