متحدہ عرب امارات میں داخل ہونے والے ہر شخص کو قرنطینہ میں رہنا لازمی قرار

متحدہ عرب امارات میں داخل ہونے والے ہر شخص کا 14روز تک قرنطینہ میں رہنا لازمی قرار

حکومت نے اپنے شہریوں کے بیرونِ ملک سفر پر پابندی لگا دی، بیرونِ ملک سے آنے والوں کیلئے ویزہ آن آرئیول کی سروس بھی بند کردی گئی
دبئی ( ۔18مارچ 2020) : متحدہ عرب امارات میں داخل ہونے والے ہر شخص کا 14روز تک قرنطینہ میں رہنا لازمی قرار دیدیا گیا ہے۔ اماراتی حکومت نے خبردار کیا ہے کہ مملکت میں داخل ہونے کے بعد 14روز تک قرنطینہ میں نہ رہنے والے شخص کو جیل بھیج دیا جائے گا۔ آٹارنی جنرل حماد الشمسی نے کہا ہے کہ جو بھی شخص کسی ملک سے متحدہ عرب امارات میں داخل ہوگا اس پر لازم ہے کہ وہ خود کو 14روز تک گھر میں قرنطینہ میں رکھے تا کہ کورونا وائرس پھیلنے کا خطرہ کم ہوسکے۔ انہوں نے مزید کہا کہ جو شخص بیرونِ ملک سے آنے کے بعد 14روز سے پہلے گھر سے نکلے گا یا کسی اجتماع میں شرکت کرے گا تو اسے سزا دی جائے گی اور فوراََ جیل بھیج دیا جائے گا۔ متحدہ عرب امارات کے سکالرز اور ماہرین قوانین نے خبردار کیا ہے کہ افواہیں اور جھوٹی باتیں پھیلانا کورونا وائرس کی وبا سے کہیں زیادہ خطرناک جرم ہے۔ اس پر اماراتی قانون میں قید اور جرمانے کی سزا مقرر کی گئی ہے۔ دس لاکھ درہم تک جرمانہ ہوسکتا ہے۔ الامارات الیوم کے مطابق جو شخص کسی ویب سائٹ یا انفارمیشن نیٹ یا انفارمیشن ٹیکنالوجی کے کسی بھی ذریعے سے افواہیں یا غلط معلومات یا خبریں یا اطلاعات پھیلائے گا اس پر دس لاکھ درہم تک جرمانہ ہوگا اور قید کی سزا بھی دی جائے گی۔ افواہیں پھیلانے پر10 لاکھ درہم تک جرمانہ ہوک سکتا ہے جبکہ 5 سال قید کی سزا بھی سنائی جاسکتی ہے۔ واضح رہے کہ متحدہ عرب امارات میں کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے موثر احتیاطی اقدامات کیے گئے ہیں تاہم ہر روز کورونا کے نئے مریض سامنے آرہے ہیں۔ اماراتی وزارت صحت کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ مملکت میں مزید 15 افراد میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جس کے بعد کورونا سے متاثرہ افراد کی گنتی 113 تک پہنچ گئی ہے۔ متحدہ عرب امارات نے اپنے شہریوں کے بیرونِ ملک سفر پر پابندی لگا دی ہے۔ حکومت نے کورونا وائرس کے پھیلاؤ سے بچنے کیلئے اپنے شہریوں کے دوسرے ممالک کے سفر پر بین لگادیا ہے۔ اماراتی شہری غیرمعینہ مدت تک کسی بھی ملک کا سفر نہیں کرسکیں گے۔ اس کے علاوہ بیرونِ ملک سے آنے والے مسافروں کیلئے ویزہ آن آرئیول کی سروس بھی بند کردی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں