سعودی عرب میں کرفیو سخت، اضافی پابندیاں عائد کردی گئیں

سعودی عرب میں کرفیو سخت، اضافی پابندیاں عائد کردی گئیں

سعودی عرب میں کرفیو سخت، اضافی پابندیاں عائد کردی گئیں

حکومت نے سعودی عرب کے شہر مدینے میں کرفیو کے دوران اضافی پابندیاں عائد کردیں۔عرب میڈیا کی رپورٹ کے مطابق مدینے کے 6 محلوں کے رہائشیوں پر اضافی پابندیاں عائد کی گئی ہیں۔ مذکورہ رہائشیوں پر انتہائی ناگزیر حالات کے علاوہ آنے جانے پر مکمل طور پر پابندی ہے۔نئی پابندیوں کے تحت تمام شہریوں کو 24 گھنٹے گھروں میں رہنے کی تلقین کی گئی ہے۔ مدینہ منورہ کے محلے الشریبات، بنی ظفر، قربان، الجمعہ، بنی خدرہ اور اسکان میں پابندیوں کا اطلاق ہوگیا جو دو ہفتوں تک جاری رہے گا۔پابندیوں پر نفاذ

آج ہفتہ سے آئندہ 14 دن تک جار ی رہے گا۔البتہ خادم حرمین شریفین کی جانب سے جاری کردہ شاہی فرمان میں جن شعبوں کو پابندی کے دوران استثنیٰ قرار دیا گیا ہے وہ اسی طرح برقرار رہے گا۔ رہائشیوں کو صحت خدمات اور کھانے پینے کی ضرورت کے لیے گھر سے نکلنے کی اجازت ہوگی۔ خیال رہےمدینہ منورہ میں کرفیو کا دورانیہ وسیع کرتے ہوئے دوپہر 3 بجے سے صبح 6 تک بڑھایا گیا ہے۔دوسری جانب سعودی حکومت نے مملکت میں کرفیو کے دوران آمد ورفت کے لیے ہدایات جاری کرتے ہوئے وضاحت کی ہے کہ ایسے ادارے جن کے کارکنان کو کرفیو سے استثنی حاصل ہو وہ بھی بلا ضرورت گھر سے نہیں نکل سکتے۔ حکم کی خلاف ورزی پر کارروائی ہوسکتی ہے۔