سردی کے موسم کی کھانسی سے پریشان افراد مولی کو اس طرح استعمال کریں اور کھانسی سے نجات پائيں

مولی ہمارے ملک میں سردی کے موسم میں آنے والی ایسی سبزی ہے جس کی جڑ کو کھانے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے- یہ ایک موسمی سبزی ہے جو کہ عام طور پر صرف اسی موسم میں آتی ہے مگر پہاڑی علاقوں میں یہ سارا سال بھی پائی جاتی ہے ۔ یہ فائدوں کے اعتبار سے اتنی خاص ہوتی ہے کہ اس کو مہنگے فائدوں والی سبزی کے نام سے بھی پہچانا جاتا ہے-

یہ مختلف بیماریوں کے علاج کے لیے مختلف انداز میں استعمال کی جاتی ہے- عام طور پر لوگ اس کو کچا ہی سلاد کے طور پر کھاتے ہیں اس صورت میں بھی یہ بہت مفید ہوتا ہے مگر آج ہم آپ کو اس کے کچھ ایسے خاص استعمال بتائيں گے جو کہ اس کی افادیت کو بڑھا دیتے ہیں-
1: پتے اور گردے کی پتھری کے لیے عام طور پر پتے اور گردے کی پتھری کے سبب شدید درد ہوتا ہے اور ڈاکٹر اس کا علاج آپریشن ہی بتاتے ہیں مگر مولی کے صرف دو ہفتے تک استعمال سے یہ پتھری ٹکڑے ٹکڑے ہو کر ختم ہو جاتی ہے- اس کے لیے ہر روز صبح دو ہفتے تک مولی کے رس کے دو کھانے کے چمچ نہار منہ پئيں اس سے پتھری ٹکڑے ٹکڑے ہو کر قدرتی طور پر نکل جاتی ہے- : یرقان کے مریضوں کے لیے یرقان کے مریضوں کے لیے مولی کسی نعمت سے کم نہیں ہے کیوں کہ مولی جسم میں سے زہریلے مادوں کو خارج کر کے جگر کے افعال کو بہتر کرتا ہے- ایسے مریضوں کو مولی کے رس کا استعمال گڑ کے رس کے ساتھ ملا کر کرنا چاہیے اس سے نہ صرف یرقان کے اثرات ختم ہوتے ہیں بلکہ جگر صحت مند ہو جاتا ہے- 3: کھانسی کے لیے کھانسی دو طرح کی ہوتی ہے جس میں سے ایک قسم خشک کھانسی کی ہوتی ہے جبکہ دوسری قسم بلغم والی کھانسی کی ہوتی ہے- مولی کا استعمال دونوں صورتوں مین مفید ثابت ہوتا ہے کیوں کہ یہ مغرج بلغم ہوتی ہے اس کے ساتھ ساتھ اس میں ایسے اجزا بھی موجود ہوتے ہیں جو کہ اندرونی سوزش کا خاتمہ کرتی ہے- اس لیے یہ خشک کھانسی کے لیے بھی مفید ہوتی ہے ایک چمچ مولی کے رس میں ہم وزن شہد شامل کر کے اس میں تھوڑا نمک ملاکر استعمال کرنے سے کھانسی میں فوری آرام حاصل ہوتا ہے-

4: کان کے درد کے لیے کان میں ہونے والے درد کے لیے مولی کے رس کو ہم وزن روغن گل میں ابالیں اور اس وقت تک ابالیں جب تک کہ مولی کا پانی گرم ہو کر اڑ جائے اور صرف روغن گل رہ جائے- اس کے چند قطرے کان میں ٹپکانے سے کان کے درد کی صورت میں فوری آرام ملتا ہے- 5: قوت مدافعت بڑھاتی ہے مولی کا استعمال ایک جانب تو ہاضمے کے عمل کو بہتر بناتی ہے اس کے ساتھ ساتھ اس کے اندر موجود پوٹاشیم کی موجودگی اس کو ہائی بلڈ پریشر کے مریضوں کے لیے بہت مفید ثابت ہوتی ہے- یہ عمومی صحت کو بحال کر کے انسان کی قوت مدافعت میں اضافہ کرتی ہے اور اس کو بیماریوں سے لڑنے کی طاقت فراہم کرتی ہے-

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *


asp shell
bahelievler escort antalya escort ili escort esenyurt escort beylikdz escort avclar escort