حکومت کی چھٹی کیلئے13دسمبر کوسارا لاہور مینارپاکستان پراکٹھا ہوگا، مسلم لیگ ن

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنماؤں نے کہا کہ حکومت کو گھر بھیجنے کیلئے 13 دسمبر کوسارا لاہور مینارپاکستان جائے گا،لاہور پاکستان کا دل ہے،لاہور جاگتا ہے تو پاکستان جاگتا

ہے، نئے الیکشن ہوں گے اور ووٹ کا فیصلہ ماننا پڑے گا ، یہ جلسہ نہیں تحریک ہے،دھاندلی زدہ اور فراڈ حکومت کیخلاف ہرکوئی اپنا حصہ ڈالے۔مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنماء ورکرز کنونشن سے خطاب کررہے تھے،سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اپوزیشن جس بڑے مقصد کیلئے باہر نکلی ہے ، آج بات سیاست اور قتدار کی نہیں بلکہ پاکستان کے بچانا ہے۔ 2018ء میں دھاندلی کے باوجود ایوانوں میں گئے کہ جمہوریت کا سفر چلتا رہے لیکن دوسال میں عمران خان کی وزارت عظمیٰ سے پاکستان کو تباہی کے سوا کچھ نہ دیا ۔ ہم نے کوشش کی پارلیمان بھی چلے، عوام کے مسائل بھی حل ہوں۔آج ہر پاکستانی محسوس کرتا ہے کہ حالات بدتر ہوتے جارہے ہیں۔ اسی مقصد کیلئے پی ڈی ایم بنائی گئی۔ 13دسمبر کا جلسہ مسلم لیگ اور پی ڈی ایم کا جلسہ ہے، یہ ایک تحریک ہے، لاہور کے عوام نے اس تحریک میں حصہ ڈالنا ہے۔نوازشریف نے پانچ سالوں میں گیس، بجلی کی قیمتیں نہیں بڑھنے دی، آٹا چینی جہاں تھا وہیں پر ہے۔ میں ہراینکر سے پوچھتا ہوں کہ عمران خان کا اڑھائی سالوں میں ایک مثبت کام

نہیں ، جبکہ نوازشریف کے کام اتنے ہیں گنوانا شروع کردیں تو ٹی وی پروگرام کا وقت ختم ہوجائے۔یہ حکومتوں میں فرق ہوتا ہے۔یہ عوامی نمائندہ نہیں ہے، اس کولایا گیا ہے، اس حکومت کو عوام نے ایوانوں میں نہیں بھیجا۔ آج مسلم لیگ ن اور پوری پی ڈی ایم یہی کہتی ہے۔اس موقع پر خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ ملک میں ایک فراڈ حکومت آگئی، ایک ووٹ چورحکومت آگئی، ان کو عقل ہوتی، ان کو حکومت ملی تھی تو یہ روزگار اورمیعشت کا پہیہ چلاتا، لیکن انتقام کی آنکھوں پر پٹی باندھ لی، کیا ہوا بھائی جو اتنی کڑواہٹ ہے؟ ہمیں کام نہیں کرنے دیا پھر بھی ہم نے کا کیا۔ انہوں نے عوام کی خدمت کی بجائے اپوزیشن کو ٹارگٹ کیا، جھوٹے الزامات لگا کر جیلیں بھر دی گئیں، کوئی چھ ماہ، ایک سال ، کوئی ڈیڑھ سال بعد جیل سے واپس آگیا، آخر واپس تو آنا ہی تھا۔عدالت پر پریشر ڈالے گئے، ہم عدالتوں سے واپس آئے ۔ صحافت کو زنجیریں پہنائی گئیں۔ لوگوں کے بولنے پر پابندی لگائی گئی، لیکن جمہوریت کے نام پر فراڈ ہے۔ تم نے کیا دیا؟ سبزیاں، پھل گوشت، آٹا ، چینی ادویات مہنگی کردی، تم نے ہر چیز کی قیمت بڑھا دی ، روپیہ نیچے اور ڈالر اوپر چلا گیا۔ کہتے نوکریاں دیں گے، تم نے ایک لاکھ پچاس ہزار لوگوں کو خط غربت سے نیچے لے آئے، گھردینے کے نام پر لوگوں کے گھر گرا دیے گئے۔لاہوریوں، جب میں پنجابیوں کہتا ہوں تو بعض لوگوں کو سول پڑ جاتی ہے۔ جب تک پنجاب نہیں جاگے گا لوگوں کو حقوق نہیں ملیں گے۔ سندھ، بلوچی پشتون کہتے تھے کہ پنجاب جاگے گا تو حقوق ملیں گے ۔ لاہور پاکستان کا دل ہے، 13دسمبر کو یہ دل دھڑکے گا تو پورا پاکستان دھڑکے گا۔ہم مینارپاکستان جائیں گے اور اس کو کہیں گے گھر جاؤ، نیئے الیکشن ہوں گے ، ووٹ کا فیصلہ ماننا پڑے گا کیونکہ ملک کو ناقابل تلافی نقصان سے بچانا ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.

boztepe escort
trabzon escort
göynücek escort
burdur escort
hendek escort
keşan escort
amasya escort
zonguldak escort
çorlu escort
escort ısparta