اب صارفین کو بجلی کا بل نہیں دینا پڑے گا حکومت کا بڑا پلان سامنے آگیا

اب صارفین کو بجلی کا بل نہیں دینا پڑے گا حکومت کا بڑا پلان سامنے آگیا

دارلحکومت (مانیٹرنگ ویب) گرمی کے موسم میں لوگوں کو بجلی کا زیادہ استعمال کرنا پڑتا ہے جس کی وجہ سے بل بھی زیادہ آتا ہے جب بل آتا ہے تو پھر عوام کی چیخیں نکل جاتی ہیں۔ مگر سوال یہ ہے

کہ مہنگی بجلی کے بلوں سے جان کیسے چھڑائی جائے؟ حکومت نے اس کا بھی توڑ نکال لیا ہے۔دارلحکومت (مانیٹرنگ ویب)پنجاب بھر کی سرکاری عمارات ، درباروں ، شیلٹر ہومز سمیت دیگر کو دو ارب 58

کروڑ 50 لاکھ کی لاگت سے سولر انرجی کو منتقل کیا جائیگا ،محکمہ انرجی رواں سال 21 نئی سکیمیں شروع کرے گا۔تفصیلات کے مطابقدارلحکومت (مانیٹرنگ ویب) مہنگائی کی سونامی نے عوام کی نیند اڑادیں،

ہر نیا طلوع ہونے والا سورج مزید مہنگائی کی نوید سنا کر غروب ہوجاتا ہے،حکومت نے عوام کو ایک بار پھر گرین سنگنل دیا ہے،مہنگی بجلی کے بلوں سے جان کیسے چھڑائی جائے؟پنجاب حکومت نے سرکاری

عمارات کو سولر انرجی پر منتقل کرنے کا بڑا پلان تجویز کیا،سرکاری عمارات کو سولر پر منتقل کرنے کی 21 نئی سکیمیں رواں سال شروع کی جائیں گی۔2دارلحکومت (مانیٹرنگ ویب) ارب 58 کروڑ 50 لاکھ کی لاگت سے سرکاری عمارتوں، سکولوں ، درباوں اور شیلٹر ہومز کو بجلی کی فراہمی کے لیے سولر پر منتقل کیا جائے گا،سو ہائر سیکنڈری سکولوں کو سولر پر منتقل کرنے کے لیے رواں

سال پانچ کروڑ کے اخراجات کیے جائیں گے،20 کروڑ کی لاگت سے سرکاری کالجز کو سولر انرجی پر منتقل کیا جائےگا، رواں سال دو کروڑ 50 لاکھ خرچ کیے جائیں گے۔دارلحکومت (مانیٹرنگ ویب)علاوہ ازیں 15 کروڑ کی لاگت سے کمشنر کملیکسز کو سولر پر منتقل کیا جائےگا،رواں سال دو کروڑ 50 لاکھ خرچ کیے جائیں گے،15 کروڑ کی لاگت سے پنجاب میں موجود درباروں کو سولر انرجی پر منتقل کیا جائیگا ، تواں سال تین کروڑ کے اخراجات کیے جائیں گے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.