si puo dividere il levitra viagra levitra o cialis controindicazioni viagra ipertensione cibo effetto viagra dove comprare il viagra rosa levitra 20 mg levitra prezzo

بس اللہ کے یہ4 نام روزانہ 100دفعہ پڑھ لیں ایسا وظیفہ جو آپ کی قسمت بدل دے گا

اس کی بات میں کوئی شک نہیں کہ اللہ کریم کے جو اسمائے گرامی ہیں ان کی اتنی برکت اور اتنی وسعت ہے کہ انسان کی سوچ سے بھی باہر ہے

مصیبت و بلا چمٹ جاتی ہے بعض مرتبہ اسےکوئی غم فکر لاحق ہو جاتا ہے تو ان تمام مصیبتوں تکلیفوں کے لئے یہ جو اسمائے گرامی بتائے جارہے ہیں ان کا پڑھنا بہت ہی مفید ہے ان کے پڑھنے کی برکت سے ہر قسم کی مشکلات دور ہوتی ہیں قرض بیماری غم فکر سے چھٹکارا نصیب ہوتا ہے

لیکن ان کو پڑھتے وقت تعداد پوری پوری ہو کم نہ ہو اور زیادہ بھی نہ ہو اور رات دن میں ہر روز کسی وقت جب بھی سہولت ہو پڑھ لیا کریں تو انشاء اللہ تبارک وتعالیٰ آپ کے جو معاملات ہیں جو حل نہیں ہوتے جنہیں سالوں گزر گئے مہینے گزر گئے وہ معاملات اللہ کے فضل و کرم سے گھنٹوں میں حل ہونا شروع ہوجائیں

گےنہایت ہی مجرب عمل ہے آپ نے ہر روز بلاناغہ اول آخر گیارہ گیارہ مرتبہ اول آخر درود ابراہیمی پڑھنا ہے اور درمیان میں یا فتاح سو مرتبہ یا وھاب سو مرتبہ یا رزاق سو مرتبہ اور یا معز بھی سو مرتبہ پڑھ لینا ہے غالباپانچ یا دس منٹ اس وظیفہ پر خرچ ہوں گے جب آپ یہ وظیفہ کریں گے شیطان آپ کو روکے گاآپ کے راستےمیں رکاوٹ ڈالے گا لیکن آپ نے اللہ کی ذات پر بھروسہ اور توکل کرتے ہوئے آپ نے اس وظیفہ کو چند دن ضرور کرنا ہےتو انسان کبھی کسی مصیبت میں پھنس جاتا ہےکبھی قرض کے بوجھ میں ڈوب جاتا ہے دب جاتا ہے کبھی اسے کوئی نا کوئی

تو انشاء اللہ بہت جلد آپ کو اس وظیفہ کی برکتیں اور ملنا شروع ہوجائیں گی ۔اللہ کریم آپ کی تکالیفوں کو مصیبتوں پریشانیوں کو دور فرمائے ۔اپنے اعمال پر توجہ دیجئے حقوق العباد لازمی پورے کیجئے اور حقوق اللہ کا بھی خیال رکھئے کیونکہ اللہ کبھی حقوق کے تلف کرنے والے کو پسند نہیں فرماتا قیامت کے دن اللہ اپنے حقوق تو معاف فرمادے گامگر حقوق العباد یعنی اللہ کی مخلوق کے حقوق جو آپ نے ادا نہیں کئے ہوں گے ان کو معاف نہیں فرمائے گا ان پر آپ کو سزاد دی جائے گی اور آپ کی نیکیوں سے ان حقوق کو ادا کیا جائے گا ۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *