vendita on line viagra viagra ingredienti tutorial viagra levitra paypal lo yogurt che sostituisce il viagra viagra fa venire mal di testa levitra confezioni

عورت کب زیادہ قربت کرنا پسند کرتی ہے اور تب عورت کتنی دیر میں فارغ ہوجاتی ہے، اس کا فائد ہ کیاہوتا ہے

عورت کب زیادہ قربت کرنا پسند کرتی ہے اور تب عورت کتنی دیر میں فارغ ہوجاتی ہے، اس کا فائد ہ کیاہوتا ہے

آج کا موضوع ہے کہ عورت کب قربت کو بہت زیادہ دل کرتا ہے اور وہ کتنی دیر قربت کرنا چاہتی ہے۔ عورت جب حیض یعنی ماہواری سے فارغ ہوتی ہے تو اس کا بیضہ بچہ دانی میں آجاتا ہے۔ جو عورت کےلیے شر م کا باعث بنتا ہے۔ اور چار سے پانچ دن تک بیضہ بچہ دانی میں رہتا ہے۔ یعنی عورت زیادہ بے قرار ہوتی ہے وہ اپنے شوہر کے ساتھ قربت کرے۔ میں ان تمام مردوں کو نصیحت کرنا چاہوں گی۔ آپ اگر تھک کے ہارے بھی آتے ہیں۔ یہاں قربت میں۔

تو اپر ڈالتے ہیں۔ تو ایام کا خاص خیال رکھیں۔ تاکہ آپ کی بیوی ان مخصوص دنوں میں قربت جیسی لذت سے محرو م نہ رہ سکے ۔ اس لیے آپ یہ فرض ہے کہ جس طرح آپ کو اپنی ضرورتوں کی فکر ہوتی ہے۔ ویسے مرد پر فرض ہے کہ عورت کی جسمانی ضرورت کا بھی خیال رکھے۔ اور اس کے بعد دوسرا سوال یہ ہے کہ عورت کتنی دیر قربت کرنا چاہتی ہے۔ ان ایام کے مخصو ص دنوں میں عورت کے اندر شہوت بہت عروج پر ہوتی ہے۔ اگر مرد صیحح طریقے سے کام کرتا ہے۔ اور وہ بہت زور سے لگاتا ہے تو عورت بہت جلد ہی فارغ ہوجاتی ہے۔ مثال کے طور پر اگر عورت دس منٹ میں فارغ ہوتی ہے۔

تو ان دنوں عورت پانچ دنوں میں ہی فارغ ہوجاتی ہے۔ وہ جوڑے جن کی نئی نئی شادی ہوئی ہوتی ہے۔ اور ایک سے زیادہ بار قربت کرتے ہیں۔ تو بیوی شوہر کو منع نہیں کرتی۔ ان دنوں قربت کرنے کا فائدہ یہ ہوتاہے۔ کہ عورت کے اندر شہوت کے چانسز بہت زیادہ بڑھ جاتے ہیں۔ ہر مرد اور عورت کی یہ خواہش ہوتی ہے۔ کہ وہ جلد از جلد ماں باپ بنیں۔ بیو ی سے قربت کرنا نہایت ثواب کا کام ہے۔ اللہ پا ک سب کو اولاد نصیب کرے۔ اس کو طریقہ کہنا غلط ہو گا۔ کیونکہ یہ کوئی ایک عمل نہیں ہے بلکہ بہت سارے ٹوٹکوں کا مجموعہ ہے .

ان سب کی ہمیشہ ضرورت بھی نہیں ہوتی . مختلف ماحول میں مختلف چیزیں کام آتی ہیں . لہٰذا ان کو سمجھ کر ان کی پریکٹس کرنی پڑتی ہے . اس کی مثال ایسے ہی ہے جیسے سائیکل چلانا سیکھنا . ابتدا میں آپ سائیکل پر سے بار بار گرتے ہیں . اپنے آپ کو متوازن کرنے کے لیے مختلف حربوں کا سہارا لینا پڑتا ہے . لیکن کچھ عرصے کے بعد آپ کے جسم کے مختلف حصے اور دماغ ٹرینڈ ہو جاتے ہیں۔

اور یہ مل کار خود کار طریقے سے کام کرنے لگ جاتے ہیں . حتی کہ آپ کو سوچنا بھی نہیں پڑتا کہ کس وقت کیا کرنا ہے . بس مزے سے سائیکل چلاتے ہیں .

جس طرح تیراکی سیکھنے کے شروع میں آپ کو کچھ چیزوں کا سہارا لینا پڑتا ہے مثلاً ہوا والی جیکٹ پہننا اور پول کے کنارے لگے پائپ کا سہارا لے کر اپنے آپ کو پانی میں بیلنس کرنا اسی طرح مباشرت کے دورانئے کو بڑھانے کی پریکٹس کے شروع میں بھی آپ کو کچھ چیزوں کا سہارہ لینا پڑے گا . جیسے جیسے آپ کا دورانیہ بڑھتا جائے گا ان چیزوں کی ضرورت بھی ختم ہوتی جائے گی .

جس طرح تیراکی سیکھنے کے شروع میں آپ کو کچھ چیزوں کا سہارا لینا پڑتا ہے مثلاً ہوا والی جیکٹ پہننا اور پول کے کنارے لگے پائپ کا سہارا لے کر اپنے آپ کو پانی میں بیلنس کرنا اسی طرح مباشرت کے دورانئے کو بڑھانے کی پریکٹس کے شروع میں بھی آپ کو کچھ چیزوں کا سہارہ لینا پڑے گا . جیسے جیسے آپ کا دورانیہ بڑھتا جائے گا ان چیزوں کی ضرورت بھی ختم ہوتی جائے گی .

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *