عشق میں حساب کتاب کہاں ہوتا ہے

مولانا رومی ایک دن خرید و فروخت کے سلسلے میں بازار تشریف لے گئے‘ایک دکان پر جا کر رک گئے‘دیکھا ایک عورت کچھ سودا سلف لے رہی ہے‘سودا خریدنے کے بعد اس عورت نے جب رقم ادا کرنی چاہی تو دکان دار نے کہا’’عشق میں حساب کتاب کہاں ہوتا ہے‘چھوڑو پیسے اور جاؤ‘‘ مولانا رومی یہ سن کر غش کھا کر گر پڑے‘دکان دار سخت گھبرایا‘ اس دوران وہ عورت وہاں سے چلی گئی‘خاصی دیر بعد جب مولانا رومی کو ہوش آیا تو دکاندار نے پوچھا’’مولانا صاحب آپ کیوں بے ہوش ہو ئے؟‘‘۔مولانا رومی نے جواب دیا’’میں اس بات پر

اس بات پر بے ہوش ہوا کے تم دونوں میں اتنا قوی اور مضبوط عشق ہے کہ آپس میں کوئی حساب کتاب نہیں‘جب کہ اللہ کے ساتھ میرا عشق کتنا کمزور ہے کہ میں تسبیح کے دانے گن گن کر گراتا ہوں

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.

izmir escort
php shell
sakarya escort adapazarı escort beylikdüzü escort esenyurt escort istanbul escort beylikdüzü escort istanbul escort avcılar escort beylikdüzü escort şişli escort
istanbul escort bayan bilgileri istanbul escort ilanlari istanbul escort profilleri hakkinda istanbul escort sitesi istanbul escort numaralari istanbul escort fotograflari istanbul escort bayanlarin iletisim numaralari istanbul escort aramalari yapilan site istanbul escort istanbul escort
ısparta escort bayan profilleri bilecik escort ilanları edirne escort kadınlarının profilleri bolu escort numaraları kırşehir escort fotoğrafları burdur escort bayanların telefon numaraları ayvalık escort bayan ilanları amasya escort profilleri adapazarı escort bayan numaraları çorlu escort sitesi hakkında rize escort zonguldak escort ilanları trabzon escort bayan ilanları ve profilleri edirne escort